قرضہ سکیم برائے چائے کی کاشت، تیاری، پیکجنگ اور مارکیٹنگ

چائے دنیا میں استعمال ہونے والے تین بڑے غیر الکوحل مشروبات میں سے ایک ہے، جس کی دریافت در اصل چین میں ہوئی۔ فی الحال چائے کی صنعت چین سے دنیا کے دور دراز ممالک تک پھیل گئی ہے جو جنوبی نصف کرہ (کینیا) میں 30 عرض البلد سے لے کر شمالی نصف کرہ (جارجیا) میں 45 عرض البلد تک پھیلا ہوا ہے۔ اس کی فی کس سالانہ کھپت01 کلو سے زیادہ ہے۔ بدقسمتی سے پاکستان میں استعمال ہونے والی تمام چائے بیرونِ ملک سے درآمد کی جاتی ہے۔ پیٹرولیم اور خوردنی تیل کے بعد چائے تیسری شے ہے جس پر ہمارے اربوں روپے سالانہ خرچ ہوتے ہیں۔ مزید برآں، سال 2020 میں، پاکستان دنیا میں چائے درآمد کرنے والے ملکوں میں سرِفہرست تھا، جس کا تخمینہ تقریباً 590 ملین ڈالرہے۔

مذکورہ بالا حقائق کو مدِنظر رکھتے ہوئے،زرعی ترقیاتی بینک چائے کی پیداوار کو بڑھانے کے لیے کسانوں کو پہلے ہی قرض فراہم کر رہا ہے۔ اب اس اقدام کو مزیدبہتر بنانے کے لیے،چائے کی کاشت، تیاری، پیکجنگ اور مارکیٹنگ کے لیے بھی قرضہ جات فراہم کیئے جائیں گے۔ نیز بینک چائے کے کاشتکاروں کو مارکیٹنگ کی سہولیات فراہم کرنے کی ہر ممکن کوشش کرے گا۔

شرائط و ضوابط

دائرہ کار

یہ اسکیم ایبٹ آباد اور مینگورہ زون کے تحت آنے والی تمام شاخوں میں لاگو ہوگی۔

اہلیت

اس سکیم کے تحت تمام اہل نئے اور پرانے کسان بھائی بھر پور فائدہ اُٹھا سکتے ہیں۔

اشیا برائے قرض

کھاد، بیج، سولر ڈرائر اور پیکنگ کا سامان

مطلوبہ دستاویزات

کمپیوٹرائزڈ شناختی کارڈ کی نقل
درخواست برائے قرضہ
زرعی پاس بک/ فردجمعبندی
دو عدد تصاویر
eCIB رپورٹ

قرضے کی حد

اس سکیم کے تحت قرضے کی زیادہ سے زیادہ فی کس حد پندرہ لاکھ روپے تک ہے۔

قرضدار کی شراکت

قرضدار کو منظور شُدہ قرضہ کا دس فیصد اپنے حصہ کے طور پر بینک میں جمع کرانا ہو گا۔

قرضہ کے اخراجات

بمطابق مروجہ بینک چارجز

شرح مارک اپ

بینک کے جاری ترقیاتی قرضوں کی مروجہ شرح کے مطابق اس سکیم میں مارک اپ وصو ل کیا جائے گا۔

قرض کی منظوری

قرضے کی منظوری ہیڈ آفس کا متعلقہ ڈیپارٹمنٹ کرے گا۔

قرض کی ترسیل

کاغذات کی تکمیل کے بعد قرض کی رقم متعلقہ برانچ میں قرضدار کے اکاؤنٹ کے ذریعے دوقسطوں میں ادا کی جائے گی۔ پہلی قسط چائے کی کاشت کیلئے اور بعد ازاں دوسری قسط فصل کی تکمیل کے بعدسولر ڈرائر اور پیکنگ مٹیریل کیلئے۔

قرض کی وصولی کا جدول

اس سکیم کے تحت دیئے گئے قرضہ جات دس سال کی مدت کے دوران سالانہ اقساط میں بمعہ مارک اپ وصول کئے جائیں گے۔ رعائیتی مدت چار سال بغیر مارک اپ ہو گی۔

جانچ پڑتال

قرضوں کی کڑی نگرانی بینک کی مجاز اتھارٹی کریں گی۔

Logo

زراعت قرض سکیمیں



Ye Hoye Na Baat !!!

Abb ghar baithay ZTBL may Bank account kholo …

🄹🄰🄻🄳 🄰 🅁🄰🄷🄰 🄷🄰🅈